FreeCurrencyRates.com

इंडियन आवाज़     10 Aug 2022 02:19:23      انڈین آواز

کشمیر میں شری امرناتھ شرائن میں بادل پھٹنے کے بعد کئی ایجنسیاں تلاش اور بچاو میں مصروف

ٹینٹ اور خیمے پانی کے ریلے میں بہہ گئے| ۔15یاتریوں کی لاشیں بر آمد،40سے زائد لاپتہ

AMN / WEB DESK

جموں و کشمیر میں کَل شری امرناتھ گپھا میں بادل پھٹنے کے واقعے کے بعد کئی ایجنسیاں تلاش اور بچاﺅ کا کام کررہی ہیں۔ تلاش اور بچاﺅ کا یہ کام جموں وکشمیر پولیس، NDRF ، ITBP اور فوج کا عملہ انجام دے رہا ہے۔ زخمیوں کو علاج کیلئے ہوائی جہاز کے ذریعے لے جایا جارہا ہے۔ بادل پھٹنے کا یہ واقعہ کَل شام پیش آیا، جس کی وجہ سے مقدس شری امرناتھ جی گپھا کے قریب اچانک سیلاب آگیا ہے۔ سیلاب کا پانی اونچے علاقوں میں موسلادھار بارش کے بعد گپھا کے اوپر سے اور اطراف سے آیا ہے۔ NDRF کے DG اتل کروال نے بتایا کہ ابھی تک 10 لوگوں کی جانیں جاچکی ہیں

مرناتھ گپھا کے بالکل قریب جمعہ کی سہ پہر بادل پھٹ گئے جس کے نتیجے میں گھپا کے اوپرے حصے سے بہت مقدار میں پانی نیچے آیا جس نے اپنے ساتھ بھاری بھر کم پتھر اور بہت سارا ملبہ بھی لایا۔پانی کے تیز ریلے نے گھپا کے نزدیک یاتریوں کیلئے بنائے گئے خیموں اور لنگروں کو بہا لیا جس کے نتیجے میں درجنوں یاتری اسکی زد میں آئے۔ شام دیر گئے تک کئی خواتین سمیت 16افرادکی لاشیں نکالی گئی تھیں جبکہ باور کیا جارہا ہے کہ قریب4o سے زائد لاپتہ ہیں۔40یاتری گھپا کے اوپری حصے میں زخمی ہوئے ہیں۔واقعہ رونما ہونے کے فوراً بعد پولیس اور سیکورٹی فورسز کے علاوہ سیول انتظامیہ کی مدد کرنے کیلئے فوج کو طلب کرلیا گیا اور رات گئے تک بچائو کارروائیاںجاری تھیں۔
واقعہ کیسے ہوا؟
جمعہ کی صبح مطلع ابر آلود تھا اور تھوڑی ہوا بھی چل رہی تھی۔ عین شاہدین نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ صبح پہلے ہلکی ہلکی بارش ہوئی جو قریب 9بجے جاری رہی ، لیکن اسکے بعد مطلع صاٖ ہوا اور تھوڑی دھوپ بھی نکل آئی۔اس دوران یاترا بھی جاری رہی اور اس پر کوئی اثر نہیں پڑا۔انہوں نے کہا کہ دن کے 2بجے ایک بار پھر پہلے ہلکے بادل چھا گئے اور اسکے بعد کالے بادلوں اپنا بسیرا کرلیا۔ تقریباً 4بجے پہلے ہلکی بارش شروع ہوئی اور فوراً ہی تیز بارش کا ایک مرحلہ آیا اور اسکے ساتھ گرج چمک کیساتھ بادل پھٹ گئے جس نے گھپا کے نزدیک تباہی مچائی۔عین شاہدین نے بتایا کہ قریب 5بجے بہت تیز بارش ہوئی اور اسی بیچ بادل بھی پھٹ گیا، جو گھپا سے مشکل سے ڈیڑ ھ سو فٹ کی دوری پر ہوا۔انہوں نے کہا کہ دس پندہ منٹ کے بعد بارش رک گئی اور کالے بادل چھٹ گئے۔
خیمے اور لنگر
عین شاہدین نے بتایا کہ جب بادل پھٹے تو گھپا کے اوپری حصے میں سب سے بڑا لنگر( مانسا پنجاب) اسکی زد میں آیا جس کا نام و نشان مٹ گیا۔انہوں نے کہا کہ یاترا روٹ میں یہ سب سے بڑا لنگر تھا جہاں ایک ساتھ 100سے زائد یاتری کھانا کھاتے تھے۔جس وقت یہ واقعہ پیش آیا اس وقت درجنوں یاتری لنگر کے ایک حصے میں سو رہے تھے اور درجنوں افراد کھانا وغیرہ کھا رہے تھے۔مذکورہ لنگر کو پانی کا بہت بڑا ریلا اپنے ساتھ بہا کر نیچے لایا۔انہوں نے کہا کہ لنگر میں کچھ نہیں بچا ہے اور جس جگہ پر یہ تھا وہاں صرف بڑے بڑے پتھر اب موجود ہیں۔انہوں نے کہا کہ پانی اوپری حصے سے اپنے ساتھ اتنے بڑے پتھر لیکر آیا جنہیں توڑنے کیلئے بڑی مشینیں درکار ہونگی۔انکا کہنا ہے کہ پانی کے ریلے نے قریب 25سے زائد خیمے اور دو لنگر اپنے ساتھ بہا کر لئے۔
ہلاکتیں
انتظامیہ کا کہنا ہے کہ شام دیر گئے تک 13لاشیں نکالی گئیں تھیں جن میں کئی خواتین بھی شامل تھیں۔حکام کا کہنا ہے کہ ابھی لاشوں کی شناخت نہیں کی جاسکتی اور نہ مصڈہ طور پر بتایا جاتا ہے کہ کتنے لوگوں کی ہلاکت ہوئی ہوگی۔حکام کا کہنا ہے کہ ہلاکتوں میں اضاٖہ ہونا یقینی ہے کیونکہ کم از کم 40اور زیادہ سے زیادہ 70لوگ ابھی بھی لاپتہ ہیں۔چیف میڈیکل افسر گاندربل ڈاکٹر مس افروزہ نے کہا کہ شام تک40 زخمی افراد کو سیلانی ریلے سے نکالا گیا تھا جن کی مرحم پٹی کی گئی جبکہ دو کے سرما میں چوٹیں آئی ہیں اور کچھ افراد کی ہڈیاں ٹوٹ گئی ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ گھپا کے اوپری اور نچلے حصے کے ملازمین نے بتایا کہ جن کو سر میں چوٹیں آئی ہیں ان کو ائر لفٹ کر کے سکمز صورہ اورٹراما ہسپتال کنگن اور گاندربل منتقل کیا گیا ۔ انہوں نے بتایا کہ ایمرجنسی کے طور پر 28ڈاکٹروں کو ڈیوٹی پر تعینات کیا گیا ہے جبکہ مختلف ہسپتالوں سے 16ایمبولنس تیار رکھی گئی ہیں۔ ڈائریکٹر ہیلتھ سروسز ڈاکٹر مشتاق احمد راتھر بالتل بیس کیمپ میں موجود ہیں اور بالتل کے تمام راستوں پر محکمہ صحت کے ملازمین کو متحرک رکھا گیا ہے۔
گھپا کی صورتحال
گھپا کے نزدیک اور نچلے علاقوں میں جتنے بھی یاتری تھے انہیں فوری طور پر پنجترنی کے مقام پر منتقل کردیا گیا۔زخمیوں کو عارضی طبی اداروں میں منتقل کیا گیا لیکن بیشتر کو سرینگر لیجایا گیا۔یاتریوں کو نکالنے کیلئے NDRF، فوج، پولیس اور سیول انتظامیہ متحرک ہو کر کام کررہے ہیں۔فی الحال یاترا معطل کردی گئی ہے اور کسی بھی یاتری کو بالتل سے آگے نکلنے کی اجازت نہیں ہے۔فوج نے کہا کہ گھپا میں بچائو کارروائیوں کے لئے 4اضافی ٹیمیں روانہ کی گئیں۔انہوں نے کہا کہ مجموعی طور پر 10ٹیمیں کام کررہی ہیں۔
وزیر اعظم اور وزیر داخلہ
لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے وزیر اعظم نریندر مودی اور وزیر داخلہ امت شاہ کو واقعہ اور جاری بچاؤ آپریشن کے بارے میں آگاہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ مرکز تمام مدد فراہم کر رہا ہے۔انہوں نے ٹویٹ کیا‘‘وزیر اعظم اور وزیر داخلہ سے بات کی اور واقعہ کے بارے میں آگاہ کیا، وزیر اعظم اور وزیر داخلہ نے ہر طرح کی مدد کا یقین دلایا ہے،” انہوں نے مزید کہا، “ہماری ترجیح لوگوں کی جان بچانا ہے، یاتریوں کو تمام ضروری مدد فراہم کرنے کی ہدایات جاری کر دی گئی ہیں، میں صورتحال پر گہری نظر رکھے ہوئے ہوں‘‘۔انہوں نے اپنے دکھ کا اظہار کرتے ہوئے تعزیت بھی کی۔گھپا میں بادل پھٹنے کے افسوسناک واقعہ سے گہرا دکھ ہوا، جس میں قیمتی جانیں ضائع ہوئیں، میں سوگوار خاندانوں سے دلی تعزیت کرتا ہوں،” انہوں نے کہا، “این ڈی آر ایف، ایس ڈی آر ایف، بی ایس ایف، فوج، جے کے پی اور شرائن بورڈ کے منتظم کی طرف سے ریسکیو آپریشن جاری ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.

SPORTS

Chess Olympiad: Indian Women Clinch first-ever medal at Olympiad: bronze in Open section

Harpal Singh Bedi / Mamallapuram Indian women’s team scripted a new chapter by winning the country’s fi ...

CWG Men Hockey : Australia demolish India’s Gold dream with 7-0 thrashing

 Harpal Singh Bedi Blake Govers (9'), Nathan Ephraums (14', 42'), Jacob Anderson (22', 27'), Tom Wickham ( ...

Chess Olympiad;  India A in sole lead in women’s section, India B hold table-toppers Uzbekistan to a 2-2 draw

Harpal Singh BediKoneru Humpy, Tania Sachdev and Bhakti Kulkarni scored victories as India A  beat  Kazakhst ...

خبرنامہ

جگدیپ دھنکھڑ بھارت کے چودہویں نائب صدر منتخب

این ڈی اے کے امیدوار جگدیپ دھنکھڑ بھارت کے چودہویں نائب صدر م ...

تائیوان کے معاملے پر امریکہ اور چین کے درمیان پھر تلخ کلامی

تائیوان کے معاملے پر امریکی اور چینی رہنماؤں کے مابین دو گھن ...

کشمیر میں شری امرناتھ شرائن میں بادل پھٹنے کے بعد کئی ایجنسیاں تلاش اور بچاو میں مصروف

ٹینٹ اور خیمے پانی کے ریلے میں بہہ گئے| ۔15یاتریوں کی لاشیں بر ...

MARQUEE

Free entry for visitors at all protected monuments from 5th to 15th August

AMN / NEW DELHI Government has made free entry for the visitors and tourists to all its protected monuments ...

Himachal Pradesh imports Australian sheeps to improve quality of wool

AMN / WEB DESK In a bid to achieve genetic improvement of indigenous sheep and to improve the quality of wo ...

National Museum to celebrate International Museum Day 2022 from 16th-20th May

By SUDHIR KUMAR National Museum New Delhi will celebrate International Museum Day 2022 for five day from to ...

@Powered By: Logicsart