FreeCurrencyRates.com

इंडियन आवाज़     20 Aug 2018 05:06:20      انڈین آواز
Ad

تجارت کی راہ میں بھی آگے بڑھے ہندوستان اور پاکستان

دونوں ممالک نے باہمی تجارت کو خوشگوار بنانے کے اقدامات کے تحت ممبئی حملوں سے پہلے قائم تمام کاروباری کمیٹیوں کے دوبارہ تشکیل دیے جانے پر اتفاق کر لیا  ہے.
ہندوستانی کامرس سیکریٹری راہل کھللر اور پاکستان کے کامرس سیکریٹری ظفر محمد کی قیادت میں 27 اور 28 اپریل کو دونوں ممالک کے درمیان ہوئی بات چیت میں باہمی تجارت کو فروغ دینے پر بات ہوئی. کللر نے کہا کہ دونو ملک آپسی تجارت کو  کافی اہمیت دیتے ہیں .
کھللر نے کہا ، دونوں ملکوں کا تجراتی عمل گشتہ کچھ سالو ن میں  متاثر ہوا ہے  اور اسے بحال کرنا چاہیے اور اسے جاری رہنا چاہیے. اس عمل میں تیزی آنی چاہئے تاکہ جو وقت ہم نے گنیوایا ہے اس کی تلافی کی جا سکے.
نومبر 2008 میں ممبئی حملے کے بعد دونوں ممالک کے درمیان کاروباری مذاکرات روک دیا گیا تھا . اس حملے کے بعد دونوں ممالک کے درمیان میں تعلقات میں کشیدگی آ گی تھی تھا.
دونوں ملک ممبئی حملوں سے پہلے تنظیمیں تمام کمیٹیوں اور کام گروپ کو پھر سے بحال کرنے کے لئے اتفاق کیا ہے.
دونوں ممالک کے درمیان تجارت موجودہ دو ارب ڈالر سے بڑھ کر 6.5 ارب ڈالر ہونے کی امکانات ہے.
مذاکرات کے دوران ہندوستان نے پاکستان سے  ‘سب سے زیادہ ترجیح والے ملک’ کا درجہ دینے کا مطالبہ کیا  اور بجلی اور پٹرولیم مصنوعات کے ممکنہ برآمد پر بات چیت کی .
بھارتی وفد   پاکستان کے غیر فیس رکاوٹیں دور کرنے پرمتفق  ہے.
پاکستان غیر فیس رکاوٹیں ہٹانا چاہتا ہے. بھارتی افسر حالانکہ اپنے اس رخ پر قائم ہیں کہ غیر فیس رکاوٹیں پاکستان مرکوز نہیں ہیں ، یہ تمام درآمد چیزوں کے لئے ہیں.
دونوں ممالک کے حکام برآمد کی جانے والی 20 چیزوں کی فہرست کا تبادلہ اور کاروباری سہولیات کے لئے پروسیس طے کرنے پر اتفاق کیا ہے.
ساتھ ہی سپر باسمتی چاول کے مالکانہ حق کا معاملہ حل کرنے کے لئے ایک جغرافیائی شناخت متحدہ کام گروپ کو پھر سے تشکیل کرنے کا فیصلہ لیا گیا ہے.
“اس معاملے پر غور کے لئے گروپ کے اجلاس 15 جون سے پہلے منعقد کیا جایگا
ظفر محمد نے کہا کہ بات چیت کے اشو  واضح ہیں اور باہمی مفادات کے تمام مسائل پر بات چیت کی جائے گی.
انہوں نے کہا ، “میرا خیال ہے کہ اس اجلاس سے بات چیت کے عمل آگے بڑھ جائیں گے اور اجلاس کے آخر میں باہمی تجارت کو خوشگوار بنانے اور اسے فروغ دینے سے متعلق تمام مسئلے عام راے سے سلجھ سکیں گے- دیکھنا یہ ہے کہ دونوں ملکوں کہ درمیان سیاست  کے ساتھ  ساتھ تجارت کہاں تک فروغ پاتی ہے-

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

WORLD

Ad
Ad

SPORTS

HINDI NEWS

NCR DELHI

FANS AWAAZ

Ad

SCIENCE / EDUCATION / JOB

Ad

MARQUEE

Living index: Pune best city to live in, Delhi ranks at 65

The survey was conducted on 111 cities in the country. Chennai has been ranked 14 and while New Delhi stands a ...

Jaipur is the next proposed site for UNESCO World Heritage recognition

The Walled City of Jaipur, Rajasthan, India” is the next proposed site for UNESCO World Heritage recognition ...

PROMOTIONAL CONTENTS

@Powered By: Logicsart