Image

AMN WEB DESK

ایک اہم بین الاقوامی پیش رفت میں، سعودی عرب کے وزیر خارجہ شہزادہ فیصل بن فرحان آل سعود نے ہفتے کے روز تہران، ایران کا تاریخی دورہ کیا۔ یہ دورہ مشرق وسطیٰ کے دو دیرینہ حریفوں کے درمیان تعلقات میں ایک نئی گرمجوشی کی علامت ہے۔

قبل ازیں رپورٹس نے اشارہ دیا تھا کہ اس وزارتی دورے کے دوران تہران میں سعودی عرب کا سفارت خانہ دوبارہ کھل جائے گا۔

ایران اور سعودی عرب کے وزرائے خارجہ کے درمیان جون کے آغاز میں جنوبی افریقہ میں ہونے والی ملاقات، تعلقات کی مکمل بحالی اور تہران اور ریاض کے درمیان علاقائی اور اقتصادی تعاون کی توسیع کی راہ ہموار کرنے میں اہم رہی۔

ایران اور سعودی عرب کے درمیان 10 مارچ کو کامیابی کے ساتھ سفارتی معاہدہ طے پایا، جس سے سات سال سے جاری کشمکش کا خاتمہ ہوا۔ اس معاہدے میں سفارتی تعلقات کی بحالی، سفارتخانے دوبارہ کھولنے اور سفارتی مشنز کو دوبارہ شروع کرنا شامل تھا۔ ایران نے 7 جون کو باضابطہ طور پر سعودی عرب میں اپنا سفارت خانہ دوبارہ کھول دیا۔

Image

مبصرین اور تجزیہ کاروں نے اس پیش رفت کو علاقائی ممالک کے درمیان خلیج کو ختم کرنے کی جانب ایک اہم قدم قرار دیا ہے۔

اس نے ان کوششوں کا مقابلہ کیا ہے جن کا مقصد ان کے درمیان تقسیم کو فروغ دینا ہے۔

ان کا موقف ہے کہ یہ اقدام جس نے امریکہ اور اسرائیل کو مایوس کیا ہے، اس کشیدگی کو کم کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے جس نے خطے کو دہائیوں سے دوچار کر رکھا ہے۔

Image
https://theindianawaaz.com/saudi-foreign-minister-arrives-in-tehran-marking-a-historic-thaw-in-iran-saudi-relations/

By INDIAN AWAAZ

The Indian Awaaz (theindianawaaz.com) is a fast growing English news website based in New Delhi. Website covers Politics, Economy/Business, Entertainment, Health, Education, Technology, Fashion, Lifestyle, Stock Market, Commercial issues and much more. It has separate sections in Hindi and Urdu too.