Web Hosting
FreeCurrencyRates.com

इंडियन आवाज़     26 Apr 2019 09:43:17      انڈین آواز
Ad

ممتاز مزاح نگار مشتاق احمد یوسفی کا انتقال

 یوسفی 4ستمبر 1923کو ریاست راجستھا ن کے شہر جے پور میں پیدا ہوئے تھے ۔

mushtaq yusufi

کراچی / اے ایم این /

ممتاز مزاح نگار مشتاق احمد یوسفی 94 سال کی عمر میں آج انتقال کرگئے ہیں ۔. وہ گزشتہ کئی ماہ سے نمونیے میں مبتلا تھے اور کراچی کے نجی اسپتال میں زیر علاج تھے ۔
مشتاق احمد یوسفی 4ستمبر 1923کو ریاست راجستھا ن کے شہر جے پور میں پیدا ہوئے تھے ۔

وہ تقسیم کے بعد کراچی آئے تھے اور بینکنگ کے شعبے سے وابستہ رہے ،ان کی مزاح پر 5 کتابیں شائع ہوکر مقبول عام ہوچکی ہیں ۔ جن میں چراغ تلے (1961ء)، خاکم بدہن (1969ء)، زرگزشت (1976ء)،آبِ گم (1990ء)،شامِ شعرِ یاراں (2014ء) شامل ہیں۔

انہوں نے آگرہ یونیورسٹی سے فلسفے میں ایم-اے کیا جس کے بعد انہوں نے علی گڑھ مسلم یونیورسٹی سے ایل ایل بی کیا۔

تقسیم ہند کے بعد کراچی تشریف لے آئے اور مسلم کمرشل بینک میں ملازمت اختیار کی۔

ا ن کے والد ریاست کے پولیٹیکل سیکریٹری تھے اور جے پور کے پہلے مقامی مسلمان تھے جو گریجویٹ ہوئے۔

Legendary Urdu writer Mushtaq Ahmad Yusufi is no more

سن 1956ء میں یوسفی صاحب پاکستان آگئے اور مقامی بینک میں ملازمت شروع کی اور ترقی کرتے کرتے بینک کے صدر بن گئے۔

مشتاق احمد یوسفی کا ادبی سفر 1900ء میں مضمون’صنف لاغر‘ سے شروع ہوتا ہے جو لاہور سے شائع ہونے والے رسالہ ’سویرا‘ کی زینت بنا۔ اس طرح مختلف رسالوں میں ان کے مضامین شائع ہوتے رہے۔

انہیں حکومت پاکستان میں ادب میں نمایاں کارکردگی پر ہلال امتیاز اور ستارہ امتیاز سے نوازا گیا تھا۔

FOLLOW THE INDIAN AWAAZ

اردو نثر کو تخلیقی معراج عطا کرنے والی شخصیتوں میں مشتاق احمد یوسفی کا نام اگلی صف میں لیا جائے گا۔ بڑا فن کار زبان کے روایتی سانچے کو توڑ کر ایک نئی زبان خلق کرتا ہے، وہ زبان کے معنوی امکانات کو وسیع تر کردیتا ہے۔ یوسفی کا تخلیقی سفر اردو زبان کی معنوی توسیع کا بھی سفر ہے، نئے لکھنے والے اگر یوسفی کی زبان میں تخلیقی گہرائی اور گیرائی کا مطالعہ دل جمعی سے کریں تو طرزِ یوسفی کے ساتھ ساتھ اردو کی معنوی کائنات کے پھیلاؤ کا تسلسل بھی جاری رہے گا۔ بڑا ادیب کبھی نہیں مرتا، چوسر ہو کہ قلی قطب شاہ، شیکسپئیر ہو کہ غالب، حافظ ہوکہ سعدی، بیدل ہو کہ میر، جوائس ہو کہ حیدر۔ سب عالمی ادبی ورثے کا حصہ اور دانشوری کی غذا ہیں۔ یوسفی بھی دانشوری کی اسی روایت کا ایک ناگزیر حصہ ہیں۔
یوسفی صاحب نے 94 برس کی ایک. بھرپور طبیعی زندگی گزاری، ایک دنیا خلق کی ایک کو منہدم ہوتے دیکھا، جاتے جاتے ہمارے ذہن کے بند دریچوں کے لیے اپنی شگفتہ دانشوری کا سرمایہ چھوڑ گئے، یہ سرمایہ خوشبو کے جھونکوں کی طرح ہمارے ذہن کے دریچوں پر دستک دیتا رہے گا۔
یوسفی صاحب اللہ آپ کی مغفرت فرمائے، آمین۔

آبِ گم اگر مل جائے تو ہمیں بھی خبر کیجیے گا۔
ابرار مجیب

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Ad
Ad

ELECTIONS

PM Modi files nominations from Varanasi

  AMN / VARANASI Senior BJP leader and Prime Minister Narendra Modi has filed his nomination from Var ...

SC refuses to interfere with EC’s order stalling release of PM Modi’s biopic

AMN / NEW DELHI The Supreme Court TODAY refused to interfere with Election Commission, EC's order stalling th ...

Election 2019: Electioneering at peak for 4th phase

AMN Electioneering is at peak for the fourth phase of Lok Sabha polls with star campaigners of political pa ...

Ad

SPORTS

India bag one gold, two silver medals at Asian Boxing C’ships

AMN India bagged one gold and two silver medals at the Asian Boxing Championships in Bangkok on Friday. Boxer ...

Indians dominate mixed team events, lead Beijing Shooting World Cup Medals Tally

    By Harpal Singh Bedi Spearheaded by Manu Bhaker and Saurabh Chaudhary, Indian Shooters ...

Hockey India shortlists 60 players for Women’s National Coaching Camp

  Harpal Singh Bedi / New Delhi Hockey India on shortlisted 60 players for the Indian Women's National ...

Ad

MARQUEE

116-year-old Japanese woman is oldest person in world

  AMN A 116-year-old Japanese woman has been honoured as the world's oldest living person by Guinness ...

Centre approves Metro Rail Project for City of Taj Mahal, Agra

6 Elevated and 7 Underground Stations along 14 KmTaj East Gate corridor 14 Stations all elevated along 15.40 ...

CINEMA /TV/ ART

66th National Film Awards to be declared after General Elections

  The 66th National Film Awards will be declared after General Elections, 2019. In a statement, Informat ...

Priyanka Chopra is among world powerful women

AGENCIES   Bollywood actress Priyanka Chopra Jonas has joined international celebrities including Opr ...

Ad

ART & CULTURE

Noted Urdu writer Jamil Jalibi is no more

  Author of the seminal history of Urdu literature, editor of one and founder of another eminent literar ...

Telugu poet K Siva Reddy selected for prestigious Saraswati Samman

  AMN Noted Telugu poet K Siva Reddy has been selected for the prestigious Saraswati Samman, 2018 for h ...

@Powered By: Logicsart