FreeCurrencyRates.com

इंडियन आवाज़     23 Jun 2017 05:39:26      انڈین آواز

ہالینڈانتخابات میں اسلام مخالف گیرٹ وِلڈرز کو شکست

WEB DESK

Mark Rutte netherland TIAیورپی رہنماؤں نے اطمینان کا اظہار کیا

ہالینڈ کے پارلیمانی انتخابات میں وزیراعظم مارک رُٹے کی پیپلز پارٹی برائے فریڈم اور ڈیموکریسی نے کامیابی حاصل کی ہے۔ اسلام مخالف اور انتہائی دائیں بازو کے سیاستدان گیرٹ وِلڈرز کو شکست کا سامنا رہا۔
ڈچ وزیراعظم مارک رُٹے نے پارلیمانی انتخابات میں انتہائی دائیں بازو کے سیاستدان گیرٹ ولڈرز کو شکست دے دی ہے۔ انتخابی کامیابی کے بعد ہالینڈ کے وزیراعظم مارک رُٹے نے اپنے حامیوں سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ہالینڈ کے عوام نے بھرپور انداز میں عوامیت پسندی کو مات دے دی ہے اور یہ جیت ڈچ عوام کی ہے۔ دوسری جانب گیرٹ وِلڈرز نے تسلیم کیا ہے کہ وہ الیکشن میں ویسی کامیابی حاصل نہیں کر سکے، جس کی وہ توقع کر رہے تھے لیکن یہ کہ وہ پارلیمنٹ میں ایک مضبوط اپوزیشن کا کردار ادا کریں گے۔
کچھ ہفتے قبل تک وِلڈرز کی فریڈم پارٹی رائے عامہ کے جائزوں میں خاصی سبقت لیے ہوئے تھی لیکن الیکشن سے قبل اُس کی مقبولیت میں حیران کن کمی واقع ہوئی۔ اب تک ڈالے گئے ووٹوں کی جتنی گنتی مکمل ہوئی ہے، اُس کے مطابق وزیراعظم مارک رُٹے کی سیاسی جماعت پیپلز پارٹی برائے فریڈم اور ڈیموکریسی کو پارلیمان میں 32 نشستیں یقینی طور پر حاصل ہوئی ہیں۔ فریڈم پارٹی اور دو دوسری جماعتوں کو اُنیس اُنیس سیٹیں ملی ہیں۔
پندرہ مارچ کے الیکشن میں رجسٹرڈ ووٹرز میں سے تقریباً 78 فیصد نے اپنا حقِ رائے دہی استعمال کیا۔ ڈالے گئے ووٹوں کی گنتی مکمل ہونے کے بعد ہی تعین ہو سکے گا کہ درحقیقت کس پارٹی کو کتنی نشستیں حاصل ہوں گی۔ ہالینڈ میں متناسب نمائندگی کا نظام رائج ہے اور ہر پارٹی کو حاصل ہونے والی ووٹوں کے مطابق پارلیمانی نشستیں دی جاتی ہیں۔ ڈچ پارلیمان میں مجموعی نشستوں کی تعداد 150 ہے۔
یورپی رہنماؤں کا اظہار اطمینان
جرمن چانسلر انگیلا میرکل نے ہالینڈ کے پارلیمانی انتخابات میں وزیراعظم مارک رُٹے کی کامیابی پر اُنہیں مبارک باد دی ہے۔ میرکل نے ڈچ وزیراعظم سے کہا کہ وہ اپنے دوست اور ہمسایہ ملک کے ساتھ مزید تعاون کا سلسلہ جاری رکھیں گی۔ اسی طرح یورپی کمیشن کے صدر ژاں کلود ینکر کے ترجمان کے مطابق ینکر نے انتخابات میں واضح کامیابی پر مارک رُٹے کو مبارک باد دی ہے اور کہا ہے کہ عوام نے یورپ کے حق میں اور انتہا پسندوں کے خلاف ووٹ دیا ہے۔ سویڈن کے وزیراعظم نے بھی اپنے ڈچ ہم منصب کو مبارک باد کا پیغام روانہ کیا ہے۔ ایسا ہی پیغام فرانس کے صدر فرانسوا اولانڈ اور وزیر خارجہ ژاں مارک ایغو نے بھی بھیجا ہے۔
بدھ، سولہ جنوری کے روز ہونے والے ڈچ انتخابات یورپ کے انتہائی دائیں بازو کے حلقے کے لیے مسرت کا باعث نہیں رہے۔ بریگزٹ ریفرنڈم اور امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی انتخابات میں کامیابی سے یورپی اتحاد پر شکوک رکھنے والوں اور مہاجرین دوست پالیسیوں کے مخالفین کو تقویت حاصل ہوئی تھی۔ تجزیہ کاروں کا خیال ہے کہ ہالینڈ کے انتخابات نے ان حلقوں کے سیاسی غبارے سے ہوا نکال دی ہے۔

ا۔

Ad
Ad
Ad
Ad

SPORTS

Coach Constantine confident of India qualifying for the 2018 AFC U-23 championship

HSB / New Delhi Chief national coach Stephen Constantine, THursday exuded confidence that India will qualify ...

WBO sanctions fight between Vijender and China’s Zulpikar Maimaithiali

HARPAL SINGH BEDI /New Delhi Stage was cleared for much awaited fight between Indian boxing's poster boy Vije ...

Ad

Archive

June 2017
M T W T F S S
« May    
 1234
567891011
12131415161718
19202122232425
2627282930  

OPEN HOUSE

Mallya case: India gives fresh set of documents to UK

AMN India has given a fresh set of papers to the UK in the extradition case of businessman Vijay Mallya. Ex ...

@Powered By: Logicsart