FreeCurrencyRates.com

इंडियन आवाज़     26 Sep 2017 09:11:48      انڈین آواز
Ad

ميانمار ميں ممکنہ ہلاکتيں ايک ہزار سے زائد ، اقوام متحدہ

Rohingya exodus

اقوام متحدہ نے خدشہ ظاہر کيا گيا ہے کہ ميانمار ميں ہلاک ہونے والے روہنگيا مسلمانوں کی تعداد ايک ہزار سے زائد ہو سکتی ہے۔ اس کے علاوہ ميانمار سے ہجرت کر کے بنگلہ ديش جانے والوں کی تعداد ڈھائی لاکھ سے تجاوز کر چکی ہے۔

اقوام متحدہ کے ايک سينیئر اہلکار نے کہا ہے کہ ميانمار کے راکھين صوبے ميں ہلاک ہونے والے روہنگيا مسلمانوں کی تعداد ممکنہ طور پر ايک ہزار سے زائد ہو سکتی ہے۔ ميانمار کے حوالے سے اقوام متحدہ کی خصوصی نمائندہ يانگھی لی کے بقول ايسا ممکن ہے کہ طاقت کا استعمال دونوں اطراف سے جاری ہو تاہم اس کا زيادہ نشانہ روہنگيا مسلمان بن رہے ہيں۔ يانگھی لی نے جمعہ آٹھ ستمبر کو اپنے اس بيان ميں ميانمار کی نوبل امن انعام يافتہ سياسی رہنما آنگ سان سوچی پر زور ديا کہ وہ اس بارے ميں اپنی آواز اٹھائيں۔

میانمار کے صوبہ راکھين ميں مقيم روہنگيا نسل کے مسلمانوں کو سالہا سال سے ميانمار ميں نسلی امتياز کا سامنا ہے۔ روہنگيا مسلمان ميانمار کے اس خطے ميں دہائيوں سے آباد ہيں۔ ينگون حکومت انہيں بنگلہ ديش سے ہجرت کرنے والے غير قانونی تارکين وطن قرار ديتے ہوئے شہريت دينے پر آمادہ نہيں۔

يہ امر اہم ہے کہ جمعے کے روز ہلاک ہونے والوں کی جو تعداد اقوام متحدہ کی خصوصی نمائندہ يانگھی لی نے بتائی ہے، وہ حکومتی اعداد و شمار کے دو گنا سے بھی زائد بنتی ہے۔ قبل ازيں حکومت کہہ چکی ہے کہ اگست سے جاری فوج کی کارروائيوں ميں 387 روہنگيا جنگجو مارے گئے اور پندرہ فوجی ہلاک ہوئے۔ تازہ اعداد و شمار کے مطابق وہاں روہنگيا مسلمانوں کے 6,600 اور غير مسلم افراد کے قريب دو سو مکانات نذر آتش کيے جا چکے ہيں۔ تاہم يانگھی لی کا کہنا ہے کہ ايسا عين ممکن ہے کہ حکومتی اعداد و شمار حقيقی تعداد سے کہيں کم ہوں۔ انہوں نے کہا، ’’بد قسمتی کی بات يہ ہے کہ ہم اس کی تصديق نہيں کر سکتے کيونکہ ہميں متاثرہ علاقوں تک رسائی حاصل نہيں۔‘‘

اقوام متحدہ کی اس سينیئر اہلکار نے ايسے دعووں پر بھی شک و شبے کا اظہار کيا، جن کے مطابق روہنگيا نے اپنے مکانات کو خود نذر آتش کيا۔ انہوں نے اپنے ايک حاليہ انٹرويو ميں کہا تھا کہ ميانمار ميں اس وقت جاری پيش رفت کو موجودہ دور کے بد ترين انسانی الميے کے طور پر ديکھا جائے گا۔

دريں اثناء اقوام متحدہ نے يہ امکان بھی ظاہر کيا ہے کہ ميانمار ميں جاری حالات و واقعات سے پچھلے دو ہفتوں کے دوران فرار ہو کر بنگہ ديش پہنچنے والے روہنگيا مسلمانوں کی تعداد دو لاکھ ستر ہزار کے قريب ہے۔

روہنگیا کے خالی مکانات سے آگ کے شعلے اٹھنے کی اطلاعات

دریں اثنا صحافیوں کا کہنا ہے کہ انہوں نے روہنگیا مسلمانوں کے خالی کردہ مکانات سے آگ کے شعلے اٹھتے دیکھے ہیں اور وہاں جا بہ جا مسلمانوں کی مقدس کتب کے صفحات بکھرے پڑے ہیں۔ ان اطلاعات سے ان حکومتی دعووں پر شکوک پیدا ہو گئے ہیں، جن میں میانمار حکومت کا کہنا ہے کہ روہنگیا افراد جاتے ہوئے خود گھروں کو آگ لگا رہے ہیں۔ اقوام متحدہ کے مطابق اگست کی 25 تاریخ سے جاری پرتشدد واقعات کے نتیجے میں اب تک ایک لاکھ چونسٹھ ہزار روہنگیا مسلمان سرحد عبور کر کے بنگلہ دیش پہنچ چکے ہیں۔ میانمار کی فوج کے مطابق راکھین ریاست میں عسکریت پسندوں کے خلاف جاری آپریشن میں اب تک چار سو افراد ہلاک ہوئے ہیں، جن میں بڑی تعداد روہنگیا کی ہے۔

Leave a Reply

You have to agree to the comment policy.

Ad
Ad
Ad
Ad

SPORTS

Indian Wrestler Bajrang wins gold

Ashgabat Indians got four medals, including a gold through wrestler Bajrang, on the ninth day of the 5th Asia ...

Saksham Pedal Delhi a mass cycling event to be held on 5 November

New Delhi Over 5000 cyclists from all over the country will take part in the "Saksham Pedal Delhi" a premie ...

Ad

Archive

September 2017
M T W T F S S
« Aug    
 123
45678910
11121314151617
18192021222324
252627282930  

OPEN HOUSE

Mallya case: India gives fresh set of documents to UK

AMN India has given a fresh set of papers to the UK in the extradition case of businessman Vijay Mallya. Ex ...

@Powered By: Logicsart

Help us, spread the word about INDIAN AWAAZ

RSS
Follow by Email20
Facebook210
Facebook
Google+100
http://theindianawaaz.com/%D9%85%D9%8A%D8%A7%D9%86%D9%85%D8%A7%D8%B1-%D9%85%D9%8A%DA%BA-%D9%85%D9%85%DA%A9%D9%86%DB%81-%DB%81%D9%84%D8%A7%DA%A9%D8%AA%D9%8A%DA%BA-%D8%A7%D9%8A%DA%A9-%DB%81%D8%B2%D8%A7%D8%B1-%D8%B3%DB%92-%D8%B2/">
LINKEDIN