FreeCurrencyRates.com

इंडियन आवाज़     20 Nov 2017 02:45:52      انڈین آواز
Ad

دہلی اور اس پاس کے علاقوں میں سانس لینا ہوا دشوار

فضائی آلودگی کی سطح انسانی صحت کے لئے انتہائی خطرناک حد تک پہنچ گئی

AMN/نئی دہلی ۔
delhi-pollution-newدارالحکومت نئی دہلی اور سکی اس پاس کی ریاستوں میں میں فضائی آلودگی کی سطح انسانی صحت کے لئے انتہائی خطرناک حد تک پہنچ گئی اور یہاں کے ماحول میں زہریلے سموگ کی چادر تن گئی ہے اور یہاں اب سانس لینا بھی دشوار ہو گیا ہے
دلی میں فضائی آلودگی کی سنگین صورتحال کے پیش نظر ریاستی حکومت نے ایک ہفتہ کے لئے تمام اسکول بند کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔دلی میں لوگ سانس لینے میں دقت اور آنکھوں میں جلن کی شکایت کر رہے ہیں۔

دہلی کی ہوا میں آلودگی کی شرح میں ’خطرناک حد‘ تک اضافے کے باعث پبلک ہیلتھ کے شعبے میں ایمرجنسی کا نفاذ کر دیا گیا ہے۔ محمکہ صحت سے وابستہ ماہرین نے شہریوں کو تاکید کی ہے کہ وہ غیر ضروری طور پر گھروں سے باہر نہ نکلیں۔
دلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال نے ایک ٹویٹ میں کہا کہ ہر سال دلی اس موسم میں ایک مہینے کے لیے گیس چیمبر میں تبدیل ہوجاتی ہے اور ہم سب کو مل کر اس کا کوئی حل تلاش کرنا ہوگا۔
انڈین میڈیکل ایسوسی ایشن نے کہ دلی میں آلودگی کی سطح کے پیش نظر پبلگ ہیلتھ ایمرجنسی کا اعلان کر دیا ہے۔ ماہرین کا کہنا ہے کہ لوگوں کو خاص طور پر صبح کے وقت ٹہلنے سے گریزکرنا چاہیے کیونکہ اس وقت ہوا سب سے زیادہ آلودہ ہوتی ہے۔ بہت سے لوگ آنکھوں میں جلن اور گلے میں خراش کی شکایت کر رہے ہیں۔
سب سے زیادہ مشکل بچوں اور بزرگوں کے لیے ہے۔ ماہرین کا کہنا ہےکہ جہاں تک ممکن ہو لوگوں کو ماسک کا استعمال کرنا چاہیے۔ دریں اثنا نینشنل گرین ٹریبیونل نے یو پی، پنجاب اور ہریانہ کی حکومتوں سے پوچھا ہے کہ انھوں نے صورتحال کو خراب ہونے سے بچانے کے لیے کیا اقدامات کیے تھے۔
گذشتہ برس بھی دلی میں صورتحال اتنی خراب ہوگئی تھی کہ سانس لینا مشکل ہوگیا تھا۔ اس وقت کہا گیا تھا کہ یہ صورتحال دیوالی کے موقع پر پٹاخوں کے استعمال اور ہریانہ پنجاب میں کھیتوں میں آگ لگائے جانے کی وجہ سے ہوئی تھی۔
اس کے بعد سپریم کورٹ نے حکم دیا تھا کہ حکومت ہوا کے معیار کو بہتر بنانے کے لیے منصوبہ تیار کرے لیکن ماہرین کا کہنا ہے کہ تمام اقدامات ہوا خراب ہونے کے بعد کیے جاتے ہیں، اسے خراب ہونے سے روکنے کے لیے نہیں۔

اس صورتحال میں بچوں اور عمر رسیدہ افراد کو زیادہ محتاط رہنے کی ہدایات کی گئی ہے۔اور خبردار کیا ہے کہ آئندہ کچھ دنوں میں آلودگی کی اس شرح میں مزید اضافہ بھی ہو سکتا ہے۔
انڈین میڈیکل ایسوسی ایشن نے مطالبہ کیا تھا کہ فضا میں ضرر رساں ذرات میں اضافے میں کمی کی خاطر فوری طور پر اقدامات اٹھائے جائیں۔ ایسوسی ایشن نے بتایا نئی دہلی کی عوام کو آنکھوں میں جلن اور حلق میں تکلیف کی شکایت کا سامنا ہے، جس کی وجہ شہر کی فضا میں مضر صحت ذرات کی موجودگی میں خطرناک حد تک اضافہ بنا ہے۔ گزشتہ برس عالمی ادارہ صحت کی جانب سے جاری کیے جانے والے ایک جائزہ کے مطابق نئی دہلی دنیا کے آلودہ ترین شہروں مں سے ایک ہے۔
ماحولیاتی آلودگی کی یہ شرح ایک ایسے وقت میں زیادہ ہوئی ہے، جب جرمن شہر بون میں عالمی ماحولیاتی کانفرنس COP 23 کا آغاز ہو چکا ہے۔ اقوام متحدہ کے زیر اہتمام جاری اس اجلاس میں 195 ممالک کے پچیس ہزار سے زائد افراد شریک ہیں، جو پیرس کلائمٹ ڈیل کے تحت کیے جانے والے وعدوں پر عملدرآمد کے لیے ایک عالمی حکمت عملی ترتیب دینے کی کوشش کریں گے۔

ئی دہلی میں ریکارڈ کیے جانے والے ڈیٹا کے مطابق دہلی ایئرکوالٹی انڈیکس میں 999 پوائنٹس کے ساتھ دنیا کا آلودہ ترین شہر تھا۔
ایئرکوالٹی انڈیکس کے مطابق اگر فضائی آلودگی کی سطح 500 پوائنٹس پر پہنچ جائے تو وہ انسانی صحت کے لیے نقصان دہ ہوجاتا ہے۔
اس کے مقابلے میں میکسیکو سٹی ، لاس اینجلس اور بیجنگ میں میں فضائی آلودگی 51 سے 100 پوائنٹس تک ریکارڈ کی گئی جبکہ ادیس ابابا، لندن اور نیویارک میں فضا میں آلودگی 1 سے 50 پوائنٹس تک رہی۔

نئی دہلی کے بعد چین کے باؤڈنگ کو 298 پوائنٹس کے ساتھ دوسرا آلودہ ترین شہر قرار دیا گیا جبکہ ورلڈ ایئر کوالٹی انڈیکس میں بھارت کا شہر چندرا پور 824 پوانٹس کے ساتھ خطرناک حد عبور کرگیا۔

اس بیچ نئی دہلی میں اسموگ اور بڑھتی ہوئی فضائی آلودگی کے خلاف عوام سراپا احتجاج بھی ہیں دوسری جانب آلودگی سے بچاؤ کے ماسک تیار کرنے والوں کا کاروبار عروج پر پہنچ گیا ہے۔
ماضی میں بھی نئی دہلی کی حکومت فضائی آلودگی کو کم کرنے کے لیے کئی اقدامات کرتی رہی ہے جن میں مخصوص اوقات میں ڈیزل گاڑیوں اور مال بردار ٹرکس کے داخلے پر پابندی وغیرہ شامل ہیں۔
اسی طرح ٹریفک کا دباؤ کم کرنے کے لیے ایک دن جفت اور ایک دن طاق اعداد کی نمبر پلیٹس کی حامل گاڑیوں کو سڑک پر آنے کی اجازت دینے کی تجویز بھی سامنے آئی تھی۔

Follow and like us:
20

Leave a Reply

You have to agree to the comment policy.

Ad

NEWS IN HINDI

अब बिहार से नेपाल के लिए ट्रेन चलेगी

  नई दिल्ली: रेलवे ने बिहार वासियों को ए ...

हार्दिक ने कांग्रेस को समर्थन का एलान किया

  नई दिल्ली : गुजरात में विधानसभा चुनाव ...

UP: अवैध गन्ना खरीद में लिप्त गन्ना माफिया जाएंगे जेल

अवैध खरीद में लिप्त पाए जाने पर चीनी मिलें ...

Ad
Ad
Ad

SPORTS

Women’s Youth Boxing Championships gets off to start in Guwahati

  The AIBA Women's Youth Boxing Championships got off to a colourful start in Guwahati today in the pr ...

Berhanu Legese and Almaz Ayana win 7 Airtel Delhi Half Marathon

HARPAL SINGH BEDI /NEW DELHI The 2017 edition of the Airtel Delhi Half Marathon lived up to its legacy of bei ...

Ad

Archive

November 2017
M T W T F S S
« Oct    
 12345
6789101112
13141516171819
20212223242526
27282930  

OPEN HOUSE

Mallya case: India gives fresh set of documents to UK

AMN India has given a fresh set of papers to the UK in the extradition case of businessman Vijay Mallya. Ex ...

@Powered By: Logicsart

Help us, spread the word about INDIAN AWAAZ

RSS99
Follow by Email20
Facebook210
Facebook
Google+
http://theindianawaaz.com/%D8%AF%DB%81%D9%84%DB%8C-%D8%A7%D9%88%D8%B1-%D8%A7%D8%B3-%D9%BE%D8%A7%D8%B3-%DA%A9%DB%92-%D8%B9%D9%84%D8%A7%D9%82%D9%88%DA%BA-%D9%85%DB%8C%DA%BA-%D8%B3%D8%A7%D9%86%D8%B3-%D9%84%DB%8C%D9%86%D8%A7">
LINKEDIN